ادرک کا استعمال ’بلڈ شوگر‘ میں کمی

ادرک کے استعمال کے چند فوائد
’ادرک کے سواد‘ والا محاورہ تو کہیں نہ کہیں سننے میں آ ہی جاتا ہے لیکن سوال یہ ہے کہ آیا ادرک کے استعمال کے طبی فوائد بھی ہیں؟

آج تک مکمل کیے گئے کئی تحقیقی مطالعاتی جائزوں کے نتائج کے مطابق ادرک کے کئی طبی فوائد ہیں اور اس کی مدد سے مختلف بیماریوں کا علاج اور ان سے بچاؤ بھی ممکن ہے۔

ادرک میں پایا جانے والے ’جنجرولز‘ نامی مادہ اس کے ترش ذائقے کا سبب ہے لیکن یہ ادرک کے طبی فوائد کا باعث بھی ہے۔ انہی طبی فوائد کے باعث ادرک کو روایتی اور غیر روایتی طریقہ علاج میں بھی استعمال کیا جاتا ہے۔
تازہ ادرک کے علاوہ اس کی چائے بھی مارکیٹ میں دستیاب ہوتی ہے اور کئی ممالک میں میڈیکل اسٹورز پر ادرک کی گولیاں بھی مل جاتی ہیں۔
طبی ماہرین کے مطابق انسانی نظام ہضم کو بہتر بنانے میں ادرک کافی معاون ثابت ہوتا ہے۔ جنجرولز کی انسداد سوزش کی خاصیت کے باعث بھی اسے استعمال میں لایا جاتا ہے جو پٹھوں کا درد ختم کرنے کے لیے کارآمد ہوتا ہے۔
ادرک کا استعمال ’بلڈ شوگر‘ میں بھی کمی لاتا ہے، جس کے باعث خاص طور پر ذیابیطس کے مرض میں مبتلا افراد کے دل کی مختلف بیماریوں میں مبتلا ہونے کے خطرات بھی کم ہو جاتے ہیں۔
علاوہ ازیں کولسٹرول کی سطح میں کمی اور متلی اور ابکائی کے علاج کے لیے بھی ادرک کا استعمال انتہائی سود مند ثابت ہوتا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں