نواز شریف کل جیل حکام کے سامنے سرنڈر کریں گے

لاہور: العزیزیہ ریفرنس میں سزا یافتہ سابق پاکستانی وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف منگل 7 مئی کو واپس جیل حکام کے سامنے سرنڈر کریں گے، ان کی چھ ہفتوں کی ضمانت کل ختم ہوجائے گی.

پاکستان کی حزب اختلاف کی سب سے بڑی جماعت مسلم لیگ ( ن) کے تاحیات قائد سابق وزیراعظم سے اظہار یکجہتی کیلئے 10کیمپ لگانے کا فیصلہ کیا ہے ۔امکان ہے کہ نواز شریف مسلمانوں کے مقدس ماہ رمضان کے پہلے روزے کی سحری گھر جبکہ افطاری جیل میں کریں گے.

نواز شریف سے اظہار یکجہتی کے لئے مختلف مقامات پر 10 کیمپ لگائے جائیں گے، پٹرول کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف شہر بھر میں بینرز آویزاں کرنیکا بھی فیصلہ کیا گیا ۔

یاد رہے کہ العزیزیہ ریفرنس میں سزا پانے والے سابق وزیراعظم نواز شریف کو سپریم کورٹ نے چھ ہفتوں کی ضمانت دی تھی ، چھ ہفتوں کے بعد عدالت نے انہیں خود کو جیل حکام کے حوالے کرنے کی ہدایت کی تھی۔

سپریم کورٹ نے گذشتہ جمع کو نواز شریف کی جانب سے ضمانت میں توسیع کےلئے دی گئی درخواستیں مسترد کردی تھیں۔جس کی وجہ سے انہوں نے جیل حکام کے سامنے سرنڈر ہونے کا فیصہ کیا ہے۔

ادھر ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگ زیب نے اپنے ٹویٹ میں کہا ہے کہ وزیر اعظم ایک گھنٹہ تقریر کرنے کے بجائے پارلیمنٹ میں صرف ایک منٹ کے لئے آکر یہ وضاحت دیں کہ رمضان سے قبل عوام پر پٹرول بم کیوں گرایا گیا ؟

مریم اورنگ زیب نے سوال اٹھایا کہ ملک کو کس دام میں آئی ایم ایف میں گروی رکھوایا ؟ آئی ایم ایف کے ملازم کو کیوں راتوں و رات سٹیٹ بنک کا گورنر لگایا ؟۔

اپنا تبصرہ بھیجیں